فنانس بل پر اپوزيشن کا واوایلا بےبنیاد ہے، شوکت ترین

فوٹو: فائل

وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین نے کہا ہے کہ فنانس بل پر اپوزيشن کا واوایلا بےبنیاد ہے۔

قومی اسمبلی اجلاس میں وزیر خزانہ نے مالیاتی ضمنی بل 2021 ایوان میں منظوری کے لیے پیش کیا۔ 

اس موقع پر اظہارِ خیال کرتے ہوئے وزیر خزانہ کا کہنا تھا کہ مزید ٹیکس نہیں لگایا جارہا۔

ان کہنا تھا کہ کہا گیا یہ بل کیوں لارہے ہیں، صرف ڈاکیومینٹیشن ہو رہی ہے، یہ ڈاکومینٹیشن کا عمل ہے جو کرنے جارہے ہیں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ سب ڈاکیومینٹیشن سے بھاگتے ہیں، اس سے پتہ چلے گا کس نے کتنا کمایا ہے۔

قومی اسمبلی اجلاس سے خطاب میں انہوں نے یہ بھی کہا کہ ڈبل روٹی، دودھ وغیرہ کو ٹیکس سے نکال دیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ 343 ارب میں سے 280 ارب ری فنڈ ہونے ہیں تو کس چیز کا طوفان ہے، یہ پیسے کی گیم نہیں، کہا جارہا ہے طوفان آجائے گا۔

شوکت ترین کا کہنا تھا کہ جب تک 18 سے 20 فیصد ٹیکس ٹو جی ڈی پی نہیں کریں گے 6 سے 8 فیصد ترقی نہیں ہوگی۔




Source link

About Daily Multan

Check Also

دنیا میں تیل سستا ہورہا ہے، یہاں مہنگا کردیا گیا، شاہ محمود

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published.