لاہورکے علاقےسندر میں گن پوائنٹ پر مبینہ زیادتی کیس میں لڑکی کا بیان سامنے آگیا، معاملہ مزید الجھ گیا

لاہورکے علاقےسندر میں گن پوائنٹ پر مبینہ زیادتی کیس میں لڑکی کا بیان سامنے …

لاہور  (ویب ڈیسک) سندر کے علاقے میں چند دن پہلے طالبہ سے گن پوائنٹ پر مبینہ زیادتی کے واقعے کا نیا رُخ سامنے آگیا اور لڑکی کا کہنا ہے کہ ملزم نے بھائی کو جان سے مارنے کی دھمکی دیکر زیادتی کی جبکہ ملزم کے گھروالوں کا دعویٰ ہے کہ لڑکی کا لڑکے سے نکاح ہو گیا تھا۔

جیونیوز کے مطابق ادھر  ملزم حیدر علی کے گھر والوں نے دونوں کی شادی کی ویڈیوز دیتے ہوئے بتایا ہے کہ شادی دونوں خاندانوں کی رضامندی سے خوش گوار ماحول میں ہوئی، لڑکی کے گھر والوں نے بعد میں پیسے مانگ لیے جس پر معاملہ بگڑ گیا، ملزم حیدر کے والد محمد حسین کے مطابق حیدر کا 7 اکتوبر2021ء کو لڑکی سے دونوں خاندانوں کی رضامندی سے نکاح ہوا، نکاح پر سب ایک دوسرےکو مٹھائیاں کھلاتے رہے، لڑکی والے لڑکی کی رخصتی نہیں کررہے تھے، انہوں نے لڑکی کی دوسری بہن کی شادی کیلئے 5لاکھ روپے کا مطالبہ کیا۔

حیدر کی جانب سےاس کی بیوی کی رخصتی نہ کرنے پر اندراج مقدمہ کی درخواست بھی دی گئی ،مگر پولیس نےمقدمہ درج نہ کیا اور اب لڑکی کے گھر والوں نے حیدر کے خلاف زیادتی کا جھوٹامقدمہ درج کرا دیا ، محمد حسین نے مطالبہ کیا ہے کہ بیٹے کے خلاف مقدمہ خارج کرکے اسے رہا کیا جائے تاہم پولیس کا کہنا ہے کہ وہ معاملے کا جائزہ لے رہی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں لاہور کے علاقے سندر میں فرسٹ ائیر کی طالبہ سے مبینہ زیادتی کا واقعہ رپورٹ ہوا تھا جس میں پولیس کا کہنا تھا کہ طالبہ پڑوسی کے گھر کمپیوٹر سیکھنے جاتی تھی جہاں ملزم حیدر نے دوساتھیوں کے ساتھ پہلے اغوا کیا اور پھر ملزمان اسے ایک نامعلوم جگہ پر لے گئے جہاں اس سے گن پوائنٹ پر زیادتی کی۔بعد ازاں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے واقعے کا نوٹس لیا تھا جس پر پولیس نے حیدر علی نامی ملزم کی گرفتاری کی تھی۔

مزید :

جرم و انصافعلاقائیپنجابلاہور




Source link

About Daily Multan

Check Also

ٹرین زیادتی کیس میڈیکل ٹیسٹ میں متاثرہ لڑکی کا جھوٹ پکڑا گیا

ٹرین زیادتی کیس، میڈیکل ٹیسٹ میں متاثرہ لڑکی کا جھوٹ پکڑا گیا لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) ٹرین …

Leave a Reply

Your email address will not be published.